تازہ ترین
سانپ نے آدمی کو کاٹا اور پھر آدمی نے اپنی بیوی کو کاٹ لیا، لیکن زندہ کون بچا؟ ناقابل یقین واقعہ         صدی کا سب سے بڑا مقدمہ، تاریخ کے سب سے بڑے منشیات سمگلر ایل چیپو کو سخت ترین سزا سنادی گئی         28 سالہ دلہن نے 70 سالہ دولہے کو لوٹ لیا         امیر ترین ہسپانوی سپر ماڈل کی مفلسی، سڑک پر آگئی         محمد اقبال چوہدری کے تایا جان کی روح کے ایصال ثواب کے لئے قران خوانی اور ختم شریف میں معززین کی شرکت         شفقت علی رضا اور رضوان کاظمی کی پالسن کے اونر چوہدری امانت علی وڑائچ اور محمد بلال علی سے ملاقات         سپین ۔کشمیری حریت پسند مقبول احمد بٹ شہید کی 35ویں برسی کی تقریب         بہاماس میں ہیٹی سے تارکین وطن کو لے جانے والی کشتی الٹنے سے 28 مسافر ڈوب گئے         بحیرہ روم میں ہلاک ہونے والے پاکستانیوں کی تعداد میں اضافہ         لیبیا کے قریب بحرہ احمر میں کشتی الٹنے سے 90 تارکین ڈوب کر ہلاک ہوگئے         67 سالہ دولہے اور 24 سالہ دلہن کی جان کو خطرہ         پاکستان اب ای پاسپورٹ اشو کرے گا تیاریاں مکمل         اوسپتالیت میں بین المذاہب ہم آہنگی سیمینار ، پاکستانیوں کی جانب سے طاہر رفیع کی شرکت         چوہدری شوکت آف قرطبہ ریسٹورنٹ کا حافظ عبدالرزاق صادق کے اعزاز میں عشائیہ ، معززین کی شرکت         دوران پروازجہاز کے انجن میں آگ لگ گئی ، مسافر محفوظ رہے        
1501517514dailyausaf

پاکستان انتہائی پسندیدہ ملک۔۔۔۔۔بھارتی وزیر نے چونکا دینے والا بیان دے ڈالا

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک ) بھارت نے کہا ہے کہ اس نے پاکستان کو دئیے گئے تجارت کیلئے انتہائی پسندیدہ ملک کے درجے پرنظرثانی کے حوالے سے تاحال کوئی فیصلہ نہیں کیا۔ بھارتی وزیرصنعت و تجارت نرمالا سیتھارامن نے لوک سبھا کے اجلاس میں ا یک سوال کے تحریری جواب میں کہاکہ پاکستان نے تاحال بھارت کو تجارت کیلئے انتہائی پسندیدہ ملک کا درجہ نہیں دیا اور اس نے 1209 اشیاء منفی فہرست میں شامل رکھی ہوئی ہیں جو بھارت سے درآمد نہیں کی جاسکتیں۔

انہوں نے کہاکہ بھارتی حکومت نے پاکستان کو دئیے گئے انتہائی پسندیدہ درجے پرنظرثانی کے حوالے سے تاحال کوئی فیصلہ نہیں کیا۔ انہوں نے کہاکہ عالمی تجارتی تنظیم کے قواعد و ضوابط کے تحت تنظیم کے ہر رکن ملک کو دوسرے ملکوں کی طرف سے انتہائی پسندیدہ ملک کا درجہ دینا ضروری ہے، بھارت نے پہلے ہی پاکستان سمیت تمام رکن ملکوں کو یہ درجہ دیا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ انتہائی پسندیدہ ملک کے تحت عالمی تجارتی تنظیم کاہر رکن ملک دوسرے تجارتی ملک کے ساتھ غیر امتیازی برتاؤ کا پابند ہے، پاکستان نے تاحال ہمیں یہ درجہ نہیں دیا اور اس نے صرف137 مصنوعات واہگہ اٹاری بارڈر کے ذریعے بھارت سے منگوانے کی اجازت دی ہوئی ہے۔ دونوں ملکوں کے درمیان2016-17ء میں تجارت کا حجم2.28 ارب ڈالر ہے۔