تازہ ترین
سپین۔تارکین وطن پاکستانی مقامی سیاسی پارٹیوں کا حصہ بنیں ، حافظ عبدالرزاق صادق         سپین۔گستاخانہ خاکوں کے خلاف احتجاجی مظاہرہ ، ہزاروں افراد کی شرکت         گریگ فیسٹیول ’’ منجوئیک ‘‘ میں پاکستانی ثقافت کے رنگ ، پاکسانی شعرا نے اپنا کلام سنایا         سپین۔مسلم لیگ کا اجلاس احتجاجی ضرور تھا لیکن کسی کے خلاف نہیں ، عہدیداران         سپین۔مسیحیوں کو اپنا نمائندہ خودمنتخب کرنے کا حق دیا جائے ، راجو الیگزینڈر         میاں نواز شریف کے استقبال کے لئے سپین سے بھی قافلے پاکستان پہنچیں گے ، مسلم لیگ ن سپین         سپین۔ تصویری نمائش میں بے نظیر بھٹو شہید کی تصویر توجہ کا مرکز         سپین۔الیکٹرانک میڈیا نمائندگان کے پلیٹ فارم کے لئے ایگزیکٹو کمیٹی قائم         سپین۔سفیر پاکستان اور قونصل جنرل بارسلونا کی کمیونٹی سے ملاقات         سپین۔بارسلونا کرکٹ کلب کی یونیفارم کی رونمائی اور تقریب تقسیم انعامات ظہیر عباس کی شرکت         سپین۔کشمیر کی آواز سنو سیمینارمیں بیرسٹر سلطان محمود کی شرکت         جنرل سیکرٹری مسلم لیگ ن سپین راجو الیگزینڈر کی جانب سے بیگم کلثوم نواز کی صحت یابی کے لئے دعائیہ تقریب کا اہتمام         چین نے پاکستانیوں کیلئے ویزہ اجراء کو نہایت آسان کر دیا         انڈونیشیا میں کشتی ڈوبنے سے193افراد تاحال لاپتہ         موت سے بچ جانے والے مزید 522 تارکین وطن اٹلی پہنچ گئے، حکومت روکنے میں ناکام        
pic4

عمر فاروق رانجھا کے اعزاز میں ری پبلکن لیڈرساجد تارڑ کا عشائیہ

بارسلونا( پاک نیوز) سپین سے امریکا کے دورے پر گئے ہوئے پاکستان پیپلز پارٹی کے سابق صدر چوہدری عمر فاروق رانجھا کے اعزاز میں مسلم فار ٹرمپ مہم کے سربراہ اور ریپبلکن لیڈر ساجد تارڑ نے پر تکلف عشائیہ کا اہتمام کیا جس میں چوہدری بشیر تارڑ ، جسویندر سنگھ جسی ، اسد حسین ،طارق محمود ، اعجاز احمد اور فہد حسین نے خصوصی شرکت کی ۔ عشائیہ میں امریکہ کی سیاست ، پاکستان کے موجودہ حالات اور امریکا کی پاکستان کے ساتھ ساتھ ایشیاء کے حوالے سے بنائی گئی پالیسیوں جیسے موضوعات زیربحث رہے۔ اس موقع پر ری بپلکن لیڈرز ساجد تارڑ اور بشیر احمد رانجھانے کہا کہ اس وقت گرتی ہوئی مقبولیت اور چیلنجز کے باوجود صدر ٹرمپ نہ صرف ری باونڈ کریں گے بلکہ وہ دوسری مدت کے لئے آئندہ انتخابات میں بھی صدرمنتخب ہوں گے۔ ان کے اعتماد کی وجہ روزگار کے مواقع سے متعلق پالیسیاں ہیں جو نہ صرف کاروباری حلقوں بلکہ ملازمت پیشہ طبقے کے لیے بھی اہمیت رکھتی ہیں، انہوں نے کہا کہ ہم سمجھتے ہیں کہ صدر ٹرمپ کا غیر روایتی انداز بیرونی دُنیا میں بھی امریکی مفادات کے تحفظ میں کامیابیوں کا سبب بن رہا ہے۔ اس حوالے سے پاکستان کے متعلق اُمید اور نااُمیدی، دونوں طرح کے تاثرات کا ملا جُلا اظہار کیا گیا۔پاکستان پیپلز پارٹی سپین کے سابق صدر چوہدری عمر فاروق رانجھا نے کہا ہم اپنی پارٹی کو درپیش مشکلات کا اعتراف کرتے ہیں لیکن یہ بھی کہنا چاہتا ہوں کہ پارٹی کی نظریاتی اساس ہے اور یہی وجہ پیپلزپارٹی کو دوبارہ سے عروج پر پہنچائے گی۔ انہوں نے کہا کہ ہم ملکی اور سیاسی جماعتوں کے اندر شفافیت کے حامی ہیں اور پارٹی لائنوں سے ہٹ کر ملکی مفاد میں آواز اٹھانے کو ترجیح دیتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں جمہوری کلچر کو پروان چڑھایا جانا چاہیے۔ امریکہ کی سیاست میں ساجد تارڑ جیسی شخصیات کے کردار کو مثال بناتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جس معاشرے کا بھی حصہ ہوں، وہاں مثبت اور تعمیری کردار ادا کرنا چاہیے جس کے لئے سیاسی عمل کا حصہ بننا بہت ضروری ہے۔اس موقع پر ری پبلکن ساجد تارڑ کے ساتھی جسویندر سنگھ جسی بھی ان کے ساتھ موجود تھے جنہوں نے مسلم فار ٹرمپ مہم میں بھرپور کردار ادا کیا تھا۔ ساجد تارڑ نے انتخابی مہم کے دوران صدر ٹرمپ کے ساتھ وقتاً فوقتاً اپنی تعارفی نشستوں کے حوالے سے دلچسپ واقعات بھی بیان کئے۔ ری پبلکن راہنماچوہدری بشیر احمد رانجھا نے کہا کہ پاکستانی نژادامریکن کو امریکی سیاست میں متحرک کردار ادا کرنا چاہیے تاکہ وہ امریکا کی دونوں بڑی سیاسی جماعتوں کے منشور کو پڑھیں اورسمجھیں تاکہ انہیں متوازن سوچ اختیارکرنے میں مدد ملے، انہوں نے کہا کہ سیاسی جماعتوں اور انتخابات کے ایجنڈے کے مطابق ووٹ کا فیصلہ کرنا چاہیے تاکہ صحیح اور قابل اعتماد قیادت آئے ، ٹیلی فون پر نمائندہ پاک نیوز سے بات کرتے ہوئے ریپبلکن ساجد تارڑ نے کہا کہ وہ عمر فاروق رانجھا کی دعوت پر بہت جلد سپین کا دورہ کریں گے اور وہاں ہسپانوی ممبرز پارلیمنٹ کے ساتھ ساتھ پاکستانی کمیونٹی کے وفود سے بھی ملاقاتیں ہو ں گی ۔

pic1pic3