تازہ ترین
سپین۔’’روجر تورنت ماریو ‘‘کاتالونیا کے نئے اسپیکر منتخب         سینئر صحافی عادل عباسی کے اعزاز میں چوہدری کلیم الدین وڑائچ آف گورالی کا عشائیہ ، معززین کی شرکت         بیلجیئم میں دھماکا، متعدد افراد زخمی         پی آئی اےاپنی پروازوں کےدائرہ کارمیں کمی نہیں لارہی، ترجمان         تارکین وطن پرسان فرانسسکوجج کا فیصلہ اشتعال انگیز ہے،وائٹ ہائوس         سن2017 میں 1465 خواتین کوزیادتی کا نشانہ بنایا گیا         موت کے سوداگر سپین میں سر گرم عمل ، آٹے کی آڑ میں پلاسٹک کی فروخت         طارق رفیق بھٹی صحافتی میدان میں بہترین اضافہ ہیں ،بہت جلد کامیابیوں سے ہمکنار ہوں گے ،معززین سپین         عبدالصبور ہر دلعزیز شخصیت تو ہیں ہی ، لیکن وہ نقابت کے رموز خوب جانتے ہیں         چوہدری محمد ادریس نائب صدر مسلم لیگ ن سپین کا 25دسمبر کی تقریب سے خطاب         پی ٹی آئی سپین کے زیر اہتمام کرسمس اور قائد ڈے کے کیک کاٹنے کی تقریب ، سنیٹر صوبہ کاتالونیا رابرٹ مسیح کی خصوصی شرکت         پی ٹی آئی سپین کے نائب صدر عمران یونس کے والد کی وفات پر ختم شریف اور قران خوانی         مسلم لیگ ن سپین کے زیر اہتمام کرسمس ، یوم قائد اعظم اور میاں محمد نواز شریف کی سالگرہ کا کیک کاٹنے کی تقریب ہمالیہ ریسٹورنٹ پر منعقد ہو گی         تحریک انصاف سپین کے زیر اہتمام یوم قائد اعظم حویلی ریسٹورنٹ پر 25دسمبر کو منایا جائے گا         سپین ۔ کاتالونیا کے صوبائی انتخابات آخری مراحل میں داخل        
l_431774_110450_updates

سن2017 میں 1465 خواتین کوزیادتی کا نشانہ بنایا گیا

پاکستان میں سال 2017ء کے دوران 1465خواتین کو زیادتی کا نشانہ بنایا ہے ۔

ہیومن رائٹس کمیشن آف پاکستان کے اعداد وشمار کے مطابق1465 میں سے نصف سے زائد یعنی769 نو عمر بچیاں تھیں۔

اعداد و شمار کے مطابق سال 2017ء کے دوران گینگ ریپ کے 21 واقعات میں ملزمان متاثر فرد کی جان پہچان والے تھے، 5 کیسز میں قریبی رشتے دار ملوث پائے گئے۔

اعداد وشمار کے مطابق ایک واقعے میں استاد جبکہ2 واقعات میں پڑوسی ملوث نکلے، ایسے ہی 177 واقعات میں محلے دار ملزم تھے ۔

سال 2017ء میں دل دہلادینے والے گینگ ریپ واقعات کی تعداد 447 رہی جبکہ 118 مرد بھی اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنے۔

ہیومن رائٹس کمیشن کے اعداد و شمار کے مطابق 447 واقعات میں سے 343 گینگ ریپ کا مقدمہ درج ہوا ،عدالتوں میں ایسے صرف 169 مقدمات میں پیشرفت ہوئی ۔

ایچ آر سی پی کے ڈیٹا کے مطابق سال2017ء میں 530 کم عمر بچیوں کے ساتھ ریپ کے واقعات ہوئے، 250 مردوں کے ساتھ بھی ریپ کیا گیا۔

ایسے 699 واقعات کی ایف آئی آر درج ہوسکی جبکہ 11 مقدمات کی پولیس رپورٹ تک درج نہ ہو پائی، ریپ کے 558 مقدمات عدالتوں میں زیر سماعت رہے۔