تازہ ترین
یوم پاکستان مشاعرہ ، ایک شام فاخرہ انجم کے نام         پاک، اسپین اکنامک ڈپلومیسی، شفقت علی رضا         یوم پاکستان پروگرام کی کامیابی قونصل جنرل کی ان تھک محنت کا نتیجہ ہے ،امتیاز آکیہ         طاہر رفیع اور اجمل رشید بٹ ہسپانوی الیکشن میں امیدوار ہوں گے         Pakistan vs England T20 Live | 05 May 2019         Pakistan vs Australia 2nd ODI Live | 24 March 2019 | Ptv Sports Live         Thousands of Catalan separatists march in Madrid         یوم پاکستان اور ڈاکٹر محمد اسد کے عنوان سے اسپین کے تاریخی شہر غرناطہ میں پہلے پروگرام کا انعقاد         میکسیکو:حادثے میں 25 تارکین وطن ہلاک         برطانیہ میں امیگریشن اب پبلک کیلئے تشویش کابڑا موضوع نہیں رہا، سٹڈی میں انکشاف         17 سالہ جوڈی کے قتل کے شبہ میں دوسرا شخص گرفتار         ٹیپو سلطان کون تھا؟ مورخین اور ماہرین کی رائے         میکسیکو نائٹ کلب پر فائرنگ ،15 ہلاک         دُبئی: پاکستانی ڈرائیور نے چوری کرنے پر بھارتی ملازم کو پکڑوا دیا         موٹرولا کے Razr فولڈ ایبل فون کے فیچرز سامنے آ گئے        
1618171-bilawal-1516903030

نوازشریف عدالتی اصلاحات نہیں اپنی عدلیہ چاہتے ہیں،بلاول

چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو  زرداری نے کہا ہے کہ نوازشریف عدالتی اصلاحات نہیں اپنی عدلیہ چاہتے ہیں، انہوں نے کبھی پارلیمنٹ کو عزت نہیں دی۔

بلاول بھٹو نے لاہور میں عاصمہ جہانگیر کے گھر پہنچ کر اہل خانہ سے تعزیت کی ،میڈیا سے گفتگو میں پی پی چیئرمین نے کہا کہ اپنی کرپشن بچانے کے لیے نوازشریف پارلیمنٹ کاسہارا لے رہے ہیں،حکومت رونا دھونا بند کرےاور اپنا کام کرے۔

ان کا کہنا تھا کہ عدالتی اصلاحات 3 ماہ میں نہیں کی جانی چاہییں،سندھ اور پنجاب کےسیاستدانوں میں جو فرق نیب کررہا ہے وہ آج تک سمجھ نہیں آیا۔

اس موقع پر بلاول بھٹو نے کہا کہ عاصمہ جہانگیر ایسا پاکستان چاہتی تھیں جہاں مرد اور خواتین میں کوئی تفریق نہ ہو، لاہور کے پروگریسو سوچ رکھنےوالوں کوپیغام دیتاہوں کہ مایوس نہ ہوں، ترقی پسند خوشحال لاہور واپس بنائیں گے۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ مسلم لیگ ن ابھی بھی عدلیہ کو ڈکٹیٹ کرنا چاہتی ہے کہ فیصلہ کیا ہونا چاہیے،یہ بہت بڑا مذاق ہے کہ نوازشریف ووٹ کو عزت دو کی تحریک چلارہے ہیں،جب یہ وزیراعظم تھے تو4 بار قومی اسمبلی اور2بارسینیٹ آئے تھے۔

چیئرمین پیپلز پارٹی نے مزید کہا کہ نوازشریف پارلیمنٹ کاسہاراتب لیتے جب وہ 4 سال وزیراعظم تھے،اب کرپشن بچانے کے لئے لے رہے ہیں،آئین سپریم ہے، پارلیمنٹ اس آئین میں ترمیم کرسکتی ہے۔

ان کا کہناتھاکہ ہم جانتےہیں کہ عدلیہ اورپارلیمنٹ کے پاس کیا کیا اختیارات ہیں،نوازشریف عدالتی اصلاحات نہیں چاہتے وہ اپنی عدلیہ چاہتےہیں،اس طرح سے عدالتی اصلاحات نہیں لائی جاسکتیں۔

بلاول بھٹو نے یہ بھی کہا کہایک ایساآدمی جوتین دفعہ وزیراعظم رہا،جس کی اپنی حکومت ہے وہ اپوزیشن کا کردار ادا کررہا ہے، حکومت رونا دھونا بند کرے، اپنا کام کرے۔

انہوں نے مزید کہا کہ عدالتی اصلاحات 3 ماہ میں نہیں کی جانی چاہئیں،ملی مسلم لیگ اور تحریک لبیک نئے کھلونے ہیں۔