تازہ ترین
سپین۔تارکین وطن پاکستانی مقامی سیاسی پارٹیوں کا حصہ بنیں ، حافظ عبدالرزاق صادق         سپین۔گستاخانہ خاکوں کے خلاف احتجاجی مظاہرہ ، ہزاروں افراد کی شرکت         گریگ فیسٹیول ’’ منجوئیک ‘‘ میں پاکستانی ثقافت کے رنگ ، پاکسانی شعرا نے اپنا کلام سنایا         سپین۔مسلم لیگ کا اجلاس احتجاجی ضرور تھا لیکن کسی کے خلاف نہیں ، عہدیداران         سپین۔مسیحیوں کو اپنا نمائندہ خودمنتخب کرنے کا حق دیا جائے ، راجو الیگزینڈر         میاں نواز شریف کے استقبال کے لئے سپین سے بھی قافلے پاکستان پہنچیں گے ، مسلم لیگ ن سپین         سپین۔ تصویری نمائش میں بے نظیر بھٹو شہید کی تصویر توجہ کا مرکز         سپین۔الیکٹرانک میڈیا نمائندگان کے پلیٹ فارم کے لئے ایگزیکٹو کمیٹی قائم         سپین۔سفیر پاکستان اور قونصل جنرل بارسلونا کی کمیونٹی سے ملاقات         سپین۔بارسلونا کرکٹ کلب کی یونیفارم کی رونمائی اور تقریب تقسیم انعامات ظہیر عباس کی شرکت         سپین۔کشمیر کی آواز سنو سیمینارمیں بیرسٹر سلطان محمود کی شرکت         جنرل سیکرٹری مسلم لیگ ن سپین راجو الیگزینڈر کی جانب سے بیگم کلثوم نواز کی صحت یابی کے لئے دعائیہ تقریب کا اہتمام         چین نے پاکستانیوں کیلئے ویزہ اجراء کو نہایت آسان کر دیا         انڈونیشیا میں کشتی ڈوبنے سے193افراد تاحال لاپتہ         موت سے بچ جانے والے مزید 522 تارکین وطن اٹلی پہنچ گئے، حکومت روکنے میں ناکام        
pic-spain-press-conference

سوسائٹی فار کرائسٹ اور مسلم لیگ ن سپین کی سانحہ شاہدرہ پر مشترکہ پریس کانفرنس

بارسلونا(پاک نیوز ) سپین میں مقیم پاکستانی کرسچن کمیونٹی کی نمائندہ جماعت سوسائٹی فار کرائسٹ سمیت دوسری مسیحی تنظیمات اور مسلم لیگ ن سپین کے نمائندوں نے بارسلونا میں ہونے والی پریس کانفرنس میں شاہدرہ کے پطرس اور ساجد مسیح پر ہونے والے پولیس اور ایف آئی اے کے مظالم اور ایک سازش کے تحت شاہدرہ میں مقیم کرسچن کمیونٹی کے گھروں کے گھیراؤ پر شدید الفاط میں مذمت کی اور حکومت پاکستان سے مطالبہ کیا کہ پاکستان میں قانون کی موجودگی میں بغیر ثبوت کے کسی پر ایسا الزام لگانا کہ جس سے اس کی زندگی کو خطرہ ہو سراسر زیادتی ہے ۔ سوسائٹی فار کرائسٹ کے صدر راجو الیگزینڈر نے کہا کہ اگر پطرس یا ساجد مسیح نے کوئی جرم کیا ہے تو اس کی سزا موجود ہے لیکن اگر وہ بے گناہ ہیں تو ان محرکات کو پکڑا جائے جنہوں نے شاہدرہ میں ایسا متنازع ماحول پیدا کیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ پیسوں کے لین دین کے معاملے کو مذہبی رنگ دینا زیادتی ہے ، پیٹر بہادر کا کہنا تھا کہ پطرس اور ساجد مسیح سے انسانیت سوز تفتیش کرنا نا انصافی کی انتہا ہے ، پادری بابر نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ دو بھائیوں کو ایک دوسرے کے ساتھ نازیبا حرکات کرنے پر مجبور کرنا کہاں کی تفتیش ہے ؟ اس موقع پر مسلم لیگ ن سپین کے صدر ایاز عباسی نے وزیر اعلیٰ پنجاب سے مخاطب ہوتے ہوئے اپیل کی کہ ایسے معاملات پر حکومت کو سخت ایکشن لینا چاہیئے ، اگر دونوں کرسچن ملزمان نے ناموس رسالت ﷺ کی بے حرمتی کی ہے تو قانون کے مطابق انہیں سزاملنی چاہیئے ، مسلم لیگ کاتالونیا کے صدر راجہ ساجد محمود ، سرپرست اعلیٰ حاجی اسد حسین ، جنرل سیکرٹری مسلم لیگ ن سپین ملک شاہد حسین اور بشیر مسیح نے اپنے مشترکہ بیان میں کہا کہ انبیاء کرام کی بے حرمتی کبھی بھی برداشت نہیں کی جا سکتی ، اگر ملزمان کے خلاف یہ جرم ثابت ہو جائے تو انہیں قانون کے مطابق سزا ملنی چاہیئے اور اگر کسی نے اپنے ذاتی مفاد کی خاطر پیسوں کے لین دین کو بے حرمتی کا رنگ دینے کی کوشش کی ہے تو وہ بھی سزا سے نہ بچے ، تمام شرکاء نے حکومت پنجاب سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں اقلیتوں کو تحفظ حاصل ہے اس کی یہی وجہ ہے کہ وہاں ایک دوسرے کا خیال رکھا جاتا ہے لیکن اگر کوئی گستاخی رسولﷺ میں ملوث ہو یا کوئی شخص ذاتی انتقام لینے کے لئے کسی پر ایسا الزام لگائے تو دونوں دھڑوں کو قرار واقعی سزا دینی چاہیئے اور ایسے فعل کرنے والوں کو کیفر کردار تک پہنچانا چاہیئے لیکن قانون کو اپنے ہاتھ میں لینے والوں کا تدارک کرنا بھی حکومت کی ذمہ داری ہے ۔ احتجاجی ریفرنس کے اختتام پر مسلمان اور کرسچن کمیونٹی نے مشترکہ طور پر پاکستان کی سلامتی ، استحکام اور ترقی کے لئے خصوصی دعا کرتے ہوئے کہا کہ اللہ پاکستان کو دشمن کی نظر بد سے محفوظ رکھے ۔