تازہ ترین
سپین۔تارکین وطن پاکستانی مقامی سیاسی پارٹیوں کا حصہ بنیں ، حافظ عبدالرزاق صادق         سپین۔گستاخانہ خاکوں کے خلاف احتجاجی مظاہرہ ، ہزاروں افراد کی شرکت         گریگ فیسٹیول ’’ منجوئیک ‘‘ میں پاکستانی ثقافت کے رنگ ، پاکسانی شعرا نے اپنا کلام سنایا         سپین۔مسلم لیگ کا اجلاس احتجاجی ضرور تھا لیکن کسی کے خلاف نہیں ، عہدیداران         سپین۔مسیحیوں کو اپنا نمائندہ خودمنتخب کرنے کا حق دیا جائے ، راجو الیگزینڈر         میاں نواز شریف کے استقبال کے لئے سپین سے بھی قافلے پاکستان پہنچیں گے ، مسلم لیگ ن سپین         سپین۔ تصویری نمائش میں بے نظیر بھٹو شہید کی تصویر توجہ کا مرکز         سپین۔الیکٹرانک میڈیا نمائندگان کے پلیٹ فارم کے لئے ایگزیکٹو کمیٹی قائم         سپین۔سفیر پاکستان اور قونصل جنرل بارسلونا کی کمیونٹی سے ملاقات         سپین۔بارسلونا کرکٹ کلب کی یونیفارم کی رونمائی اور تقریب تقسیم انعامات ظہیر عباس کی شرکت         سپین۔کشمیر کی آواز سنو سیمینارمیں بیرسٹر سلطان محمود کی شرکت         جنرل سیکرٹری مسلم لیگ ن سپین راجو الیگزینڈر کی جانب سے بیگم کلثوم نواز کی صحت یابی کے لئے دعائیہ تقریب کا اہتمام         چین نے پاکستانیوں کیلئے ویزہ اجراء کو نہایت آسان کر دیا         انڈونیشیا میں کشتی ڈوبنے سے193افراد تاحال لاپتہ         موت سے بچ جانے والے مزید 522 تارکین وطن اٹلی پہنچ گئے، حکومت روکنے میں ناکام        
jang-net-pic1

پاکستانی کمیونٹی کے مسائل کا حل اؤلین ترجیح ہو گی ، خیام اکبرسفیر پاکستان میڈرڈ

میڈرڈ(شفقت علی رضا ) سپین میں تعینات ہونے والے سفیر پاکستان خیام اکبر نے روزنامہ جنگ سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ مین اپنی مدت ملازمت میں کوشش کروں گا کہ یہاں مقیم پاکستانی کمیونٹی کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل ہوں ۔ انہوں نے کہا کہ سپین میں مقیم پاکستانیوں نے اپنی محنت اور ، ایمانداری اور جفا کشی سے یہاں کے مقامی محکموں اور مقامی کمیونٹی کے دلوں میں اپنا وقار اور مقام پیدا کیا ہے ، انہوں نے کہا کہ پاکستان اور سپین کی برامدات اور درامدات میں بڑی تیزی سے اضافہ ہوا جس کی وجہ سے پانچ سو ملین ڈالرز سالانہ کی شرح اب بڑھ کر ایک بلین ڈالرز تک پہنچ گئی ہے ۔سفیر پاکستان خیام اکبر نے اپنے ہم منصب رفعت مہدی کی مدت ملازمت پوری ہونے پر چارج سنبھالا ہے ۔ سفیر پاکستان کو خوش آمدید کہنے کے لئے پاک ویلنسیا ایسوسی ایشن کے چیئر مین مہر جمشید احمد پھولوں کے گلدستے لے کر سفارت خانہ پاکستان پہنچے تھے انہوں نے کمرشل قونصلر ڈاکٹر حامد ، فسٹ سیکرٹری دانش محمود اور سفیر پاکستان خیام اکبر کو پھول پیش کئے اور انہیں سپین کے شہر ویلنسیا میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کے نیک جذبات پہنچائے ، مہر جمشید احمد نے سفیر پاکستان کو یوم پاکستان کی تقریبات ویلنسیا میں منانے کی دعوت بھی دی ۔پاک ویلنسیا ایسوسی ایشن کے چیئر مین سے بات کرتے ہوئے سفیر پاکستان نے کہا کہ میں اپنی اسناد ہسپانوی بادشاہ کو پیش کرنے ے بعد باقاعدہ طور پر ویلنسیا اور بارسلونا کا دورہ کروں گا ، انہوں نے کہا کہ میں جانتا ہوں کہ پاکستانیوں کی سب سے زیادہ تعداد بارسلونا اور اس کے گرد و نواح میں مقیم ہے اس لئے اپنی کمیونٹی کو ضرور ملنا ہوگا تاکہ ان کے مسائل میں خود سن سکوں ، ایک سوال کے جواب میں سفیر پاکستان نے کہا کہ اپریل تک قونصل جنرل بارسلونا بھی اپنے عہدے کا چارج سنبھال لیں گے ، انہوں نے کہا کہ قونصل جنرل بارسلونا عمران چوہدری کچھ مصروفیات کی بنا پر بارسلونا نہیں پہنچ سکے لیکن اپریل میں وہ اپنی سیٹ پر بیٹھ جائیں گے ۔انہوں نے کہا کہ میرے لئے تمام پاکستانی برابر ہیں میں جب تک یہاں تعینات رہوں گا سب کے ساتھ بلا امتیاز ملوں گا ، میرے دروازے ہر پاکستانی کے لئے کھلے ہیں ،کسی پاکستانی بھائی کو کوئی مسئلہ ہو تو وہ بلا جھجھک مجھ سے رابطہ کر سکتا ہے ،سفیر پاکستان نے کمرشل قونصلر ڈاکٹر حامد اور فسٹ سیکرٹری دانش محمود کے کام کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ مجھے ان آفیسرزپر فخر ہے ، سفیر پاکستان نے اس موقع پر پاکستانی کمیونٹی کو اتفاق و اتحاد سے اکھٹے رہنے اور ایک دوسرے کے ساتھ مکمل تعاون کرنے پر زور دیتے ہوئے کہا کہ ایسا کرنے سے ہم اپنے مذہب اور وطن عزیز کی صحیح اور مثبت تصویر پیش کر سکتے ہیں ، انہوں نے کہا کہ یہاں مقیم تمام پاکستانی اپنے ملک کے سفیر ہیں اس لئے ہم سب کو اپنے ملک کی عزت اور وقار کو بڑھانا ہوگا ، ہمیں اپنے کردار ، صحت مندانہ سرگرمیوں اورمثبت کاموں سے پاکستان کا سافٹ امیج یہاں کی مقامی کمیونٹی کو دکھانے کے لئے مزید محنت کی ضرورت ہے ۔سفیر پاکستان نے کہا کہ اب تک یہاں جن سرکاری محکموں میں جانے کا اتفاق ہوا وہاں پاکستانی کمیونٹی کی تعریف سن کر دل خوش ہوا ہے ، یہاں کے مقامی محکمے اور کمیونٹی پاکستانیوں کے بارے میں اپنے دل کے اندر نرم گوشہ رکھتی ہے ۔اس موقع پر نمائندہ جنگ نے اپنے کالمز پر مبنی کتاب ’’ قلمی سرگوشیاں ‘‘ سفیر پاکستان کو پیش کی ۔

pic-net-2pic-net-4