تازہ ترین
سانپ نے آدمی کو کاٹا اور پھر آدمی نے اپنی بیوی کو کاٹ لیا، لیکن زندہ کون بچا؟ ناقابل یقین واقعہ         صدی کا سب سے بڑا مقدمہ، تاریخ کے سب سے بڑے منشیات سمگلر ایل چیپو کو سخت ترین سزا سنادی گئی         28 سالہ دلہن نے 70 سالہ دولہے کو لوٹ لیا         امیر ترین ہسپانوی سپر ماڈل کی مفلسی، سڑک پر آگئی         محمد اقبال چوہدری کے تایا جان کی روح کے ایصال ثواب کے لئے قران خوانی اور ختم شریف میں معززین کی شرکت         شفقت علی رضا اور رضوان کاظمی کی پالسن کے اونر چوہدری امانت علی وڑائچ اور محمد بلال علی سے ملاقات         سپین ۔کشمیری حریت پسند مقبول احمد بٹ شہید کی 35ویں برسی کی تقریب         بہاماس میں ہیٹی سے تارکین وطن کو لے جانے والی کشتی الٹنے سے 28 مسافر ڈوب گئے         بحیرہ روم میں ہلاک ہونے والے پاکستانیوں کی تعداد میں اضافہ         لیبیا کے قریب بحرہ احمر میں کشتی الٹنے سے 90 تارکین ڈوب کر ہلاک ہوگئے         67 سالہ دولہے اور 24 سالہ دلہن کی جان کو خطرہ         پاکستان اب ای پاسپورٹ اشو کرے گا تیاریاں مکمل         اوسپتالیت میں بین المذاہب ہم آہنگی سیمینار ، پاکستانیوں کی جانب سے طاہر رفیع کی شرکت         چوہدری شوکت آف قرطبہ ریسٹورنٹ کا حافظ عبدالرزاق صادق کے اعزاز میں عشائیہ ، معززین کی شرکت         دوران پروازجہاز کے انجن میں آگ لگ گئی ، مسافر محفوظ رہے        
598364_2197029_malala_updates

ملالہ کے کمرے میں کس کی تصویر لگی ہے؟

دنیا کی کم عمر ترین پاکستانی نوبل انعام یافتہ ملالہ یوسف زئی برطانیہ کی آکسفورڈ یونیورسٹی میں زیر تعلیم ہیں جہاں اُن کے کمرے میں پاکستان اور اسلامی دنیا کی پہلی منتخب خاتون وزیر اعظم ’بے نظیر بھٹو‘ کی تصویر لگی ہے۔

’دی بی بی سی‘ کو انٹرویو دیتے ہوئے 21 سالہ ملالہ یوسف زئی نے بتایا کہ انہیں دیواروں پر پوسٹرز یا تصاویر لگانے کا شوق نہیں ہے لیکن اس کے باوجود انہوں نے اپنے کمرے کی دیوار پر پاکستان کی سابقہ وزیر اعظم ’بے نظیر بھٹو‘ کی تصویر لگائی ہوئی ہے۔

دوران انٹرویو نوبل انعام یافتہ ملالہ یوسف زئی نے بتایا کہ انہیں برطانوی سٹ کامس یعنی مزاحیہ ڈرامےدیکھنا بے حد پسند ہےجس میں ’بلیک ایڈر، مائنڈیور لینگویج‘ شامل ہیں۔

اس کے علاوہ انہوں نےاپنی پسند سے متعلق بتایا کہ وہ اپنے فارغ وقت میں کرکٹ کھیلتی ہیں ، انہیں کرکٹ کھیلنا بہت پسند ہے۔

ملالہ سے سوال کیا گیا کہ پاکستان چھوڑ کر بیرون ملک شفٹ ہونا ان کے لیے کتنا آسان تھاتو اس کے جواب میں انہوں نے کہا کہ سوات چھوڑ کر امریکا منتقل ہوناابتداء میں اُن کے لیے کافی مشکل تھا لیکن اب وہ وہاں سیٹ ہوگئی ہیں اور انہوں نے یونیورسٹی میں نئے دوست بھی بنا لیے ہیں۔

واضح رہے ملالہ یوسف زئی کی کتاب’وی آر ڈسپلیسڈ‘ (We Are Displaced) رواں ماہ کے آغاز میں فروخت کے لیے پیش کی گئی تھی جس میں انہوں نے نا صرف اپنی بلکہ دنیا بھر کی دیگر خواتین کے بے گھر ہونے کی کہانی بیان کی ہے۔ اس سے قبل وہ اپنی سوانح حیات بھی لکھ چکی ہیں۔