تازہ ترین
پاکستانی سٹیج اداکاروں کی پردے کے پیچھے کی کہانی دیکھیں اس ویڈیو میں         لگرونیو والی بال ٹورنامنٹ میں چوہدری عزیز امرہ اور سبط امرہ مہمان خصوصی تھے وہاں کی یادگار تصاویر         سپین ۔ جشن آزادی شوٹنگ والی بال چیلنج کپ گجر کلب نے جیت لیا         بارسلونا میں انڈیا کے آزادی کے دن کو یوم سیاہ کے طور پر منایا گیا ، البیلا ٹی وی کی رپورٹ         پاکستان مسلم لیگ ن سپین کے صدر چوہدری محمد افضال سے میڈیا کی ملاقات         سپین۔ تیسرا ایشیاءٹی ٹوئنٹی کرکٹ کپ پاکستان نے جیت لیا         چوہدری موسی الہی کو خوش آمدید کہتے ہوئے چوہدری عبدالغفار مرہانہ کے اشتہار کا عکس         چوہدری موسی الہی کو بارسلونا آمد پر خوش آمدید کہتے ہیں ، چوہدری عبدالغفار مرہانہ         ملک عمران اور مرزا بشارت مہمان خصوصی چوہدری عزیز امرہ کا استقبال کرتے ہوئے         ملک عمران کرکٹ کی خدمت کے ساتھ ساتھ شعبہ نقابت میں بھی کمال کرتے ہیں         سپین۔تیسرے ایشیاءٹی 20 کرکٹ کپ ٹرافی کی تقریب رونمائی، مہمان خصوصی چوہدری عزیز امرہ تھے         سپین ۔ تیسرے ایشیاءٹی 20 کرکٹ کپ ٹرافی کی تقریب رونمائی         چوہدری تنویر کوٹلہ کے اعزاز میں عشائیہ ، راجہ شعیب ستی ، نوید وڑائچ، راجہ سونی و دیگر کی شرکت         سنجرانی کے خلاف عدم اعتماد تحریک کی ناکامی اپوزیشن جماعتوں کی ناکامی ہے ، چوہدری نوید وڑائچ         برازیل کی جیل میں 2 گروپوں میں تصادم، 52 قیدی ہلاک        

اقوام متحدہ اور یورپی یونین کی زیرنگرانی انسانی حقوق کمیشن کو مقبوضہ کشمیر بھیجا جائے، ویانا میں مظاہرہ

ویانا (پاک نیوز)5فروری یوم یکجہتی کشمیر کے سلسلہ میں کشمیری عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کرنے کے لئے پاکستان و کشمیر اور پوری دنیا میں جہاں جہاں پاکستانی اور کشمیری آباد ہیں یورپ سمیت کشمیری عوام کے ساتھ اظہار یکجہتی کیا جاتا ہے۔ اسی سلسلے میں آسٹریا کے دارلحکومت ویانا میں اقوام متحدہ کے دفتر یو این او کے سامنے پاکستانی کمیونٹی فورم آسٹریا کے صدر ندیم خان کی زیر قیادت اور پاکستانی کمیونٹی فورم کی زیر انتظام سہ پہر چار بجے سے لےکر شام چھ بجے تک ایک پُرامن احتجاجی مظاہرہ کا انعقاد کیا گیا۔ پُرامن احتجاجی مظاہرہ میں سخت سردی کے باوجود خواتین سمیت بچوں،بوڑھوں اور نوجوانوں نے آسٹریا بھر کے چھوٹے بڑے شہروں سے کثیر تعداد نے شرکت کی، مظاہرہ میں انڈین سکھ برادری نے بھی شرکت کرکے کشمیری قوم کے ساتھ اظہار ہمدردی کیا۔ پُرامن احتجاجی مظاہرے میں مظاہرین پاکستانی اور کشمیری پرچم لہراتے رہے اورمظاہرین نے کتبے اور بینر بھی اُٹھا رکھے تھے جن پر بھارت کے خلاف اور کشمیری عوام کے حق میں نعرے درج تھے اور پُرامن مظاہرین کشمیر بنے گا پاکستان اور کشمیر کو آزادی دو اور کشمیری شہیدوں کا خون ایک دن ضرور رنگ لائے گا کے نعرے لگاتے رہے۔ مختلف مقررین پروفیسر ملک شوکت مسرت اعوان، خواجہ منظور احمد، ڈاکٹر حمیرا جلال، بابر فہیم خان، حبیب الرحمان، جہانگیراحمد، خواجہ نسیم، ڈاکٹر اصغر،سید عبدالرحمان شاہ، گونتر ایڈوکیٹ نے یورپین یونین اور اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا کہ وہ فوری طور پر نوٹس لیں اور کشمیر میں بھارت کی جانب سے نہتے شہریوں پر کیا جانے والا ظلم و ستم بند کرایا جائے اور کشمیریوں کو اُن کے انسانی حقوق دیئے جائیں اور غیر جانبدار صحافیوں کو کشمیر میں داخل ہونے کی اجازت دی جائے۔ اُنہوں نے یورپین یونین اور اقوام متحدہ کی زیر نگرانی انسانی حقوق کا ایک مشن غیر ملکی انٹر نیشنل میڈیا کے ساتھ کشمیر کا وزٹ کرنے کا مطالبہ کیا۔ مختلف مقررین نے جرمن ،انگلش اور اردو میں تقاریر کیں۔ پُرامن احتجاجی مظاہرہ کے موقع پر پولیس نے سیکورٹی کے سخت حفاظتی انتظامات کررکھے تھے اور پُرامن مظاہرہ کے اختتام پر اقوام متحدہ کے دفتر کے سامنے سیکورٹی آفیسر کو ایک یادداشت بھی پیش کی گی۔