تازہ ترین
بارسلونا: آل پارٹیز کشمیر کانفرنس، کشمیری و پاکستانی کمیونٹی کی شرکت         پاکستانی کمیونٹی کو ترقی کی منازل طے کرنے کے لئے راجہ ضیا صدیق کا خوبصورت مشورہ         وزیر اعظم پاکستان عمران خان کی دبنگ تقریر پر چوہدری ایاز مٹھانہ چک کے تاثرات         چوہدری افضال وڑائچ کے والد کی وفات پر پاکستانی کمیونٹی کا اظہار افسوس اور دعائے مغفرت         سابق وزیر خزانہ رانا محمد افضل کی وفات پر مسلم لیگ ن سپین کا اظہار افسوس         انٹرنیشنل امن کانفرنس سپین ،مولانا عبدالخبیر آزاد کی شرکت         سپین میں امراض جگر کے اسپیشلسٹ پہلے پاکستانی ڈاکٹر عرفان مجید راجہ سے بات چیت، پاک نیوز رپورٹ         کاتالان کرکٹ لیگ فائنل کے مہمان خصوصی چوہدری عزیز امرہ ونر ٹرافی دیتے ہوئے         کاتالان کرکٹ لیگ کی چیمپیئن پاک آئی کیئر نے اپنی جیت کشمیری بھائیوں کے نام کر دی         قونصلیٹ آفس بارسلونا میں کشمیر کے حق میں احتجاج مختلف شعبہ ہائے زندگی کے معززین کی شرکت         آل پاکستان فیملی ایسوسی ایشنز، اظہار ایسوسی ایشن، ایسوسی ایشن پیس فار پیس کے زیر اہتمام ہر سال کی طرح اس سال بھی ہسپیتالت میں پاکستانی بچوں میں تعلیم کو فروغ دینے کے سلسلے میں پروگرام Back to school کا انعقاد کیا         قونصل جنرل بارسلونا عمران علی چوہدری کی کاتالونیا کے نیشنل ڈے کی تقریبات میں شرکت         قونصل جنرل بارسلونا عمران علی چوہدری کی کاتالونیا کے صدر کوائم تورا سے ملاقات         قونصل جنرل بارسلونا عمران علی چوہدری کی صوبائی فارن منسٹر الفریڈ بوش ای پاسکوال سے ملاقات         ظہیر جنجوعہ نے نئی سفارتی ذمہ داریاں سنبھال لیں        

برازیل کی جیل میں 2 گروپوں میں تصادم، 52 قیدی ہلاک

برازیل کی شمالی ریاست پارا کی ایک جیل میں قیدیوں کے دو گروپوں میں تصادم کے باعث 52 قیدی ہلاک ہو گئے، قیدیوں کے درمیان یہ تصادم پانچ گھنٹے تک جاری رہا جس کے دوران 16 قیدیوں کی گردنیں کاٹی گئیں، جبکہ دیگر قیدی جیل میں آگ لگنے کے باعث دم گھٹنے کی وجہ سے ہلاک ہوئے۔

رپورٹ کے مطابق قیدیوں نے جیل کے کچھ حصے کو آگ لگائی جس کے باعث کئی قیدی دم گھٹنے سے ہلاک ہوئے۔ حکام کے مطابق قیدیوں نے لڑائی کے دوران 2 جیل افسران کو بھی یرغمال بنا لیا تھا تاہم بعد میں انہیں رہا کردیا گیا۔ برازیلی حکام جیل میں ہنگامہ آرائی کرنے والے گروپوں کے نام ابھی منظر عام پر نہیں لائے۔

واضح رہے کہ مذکورہ جیل میں 200 قیدیوں کی گنجائش تھی تاہم یہاں 311 کے قریب قیدی موجود تھے۔ برازیل کی جیلوں میں قیدیوں کی آپس میں لڑائی غیر معمولی بات نہیں ہے اور وہاں اکثر ایسے واقعات پیش آتے رہتے ہیں جس کی سب سے بڑی وجہ جیلوں میں گنجائش سے زیادہ قیدیوں کا ہونا ہے۔ ایک رپورٹ کے مطابق برزیل کی مختلف جیلوں میں 7 لاکھ افراد قید ہیں۔