تازہ ترین
سپین میں امراض جگر کے اسپیشلسٹ پہلے پاکستانی ڈاکٹر عرفان مجید راجہ سے بات چیت، پاک نیوز رپورٹ         کاتالان کرکٹ لیگ فائنل کے مہمان خصوصی چوہدری عزیز امرہ ونر ٹرافی دیتے ہوئے         کاتالان کرکٹ لیگ کی چیمپیئن پاک آئی کیئر نے اپنی جیت کشمیری بھائیوں کے نام کر دی         قونصلیٹ آفس بارسلونا میں کشمیر کے حق میں احتجاج مختلف شعبہ ہائے زندگی کے معززین کی شرکت         آل پاکستان فیملی ایسوسی ایشنز، اظہار ایسوسی ایشن، ایسوسی ایشن پیس فار پیس کے زیر اہتمام ہر سال کی طرح اس سال بھی ہسپیتالت میں پاکستانی بچوں میں تعلیم کو فروغ دینے کے سلسلے میں پروگرام Back to school کا انعقاد کیا         قونصل جنرل بارسلونا عمران علی چوہدری کی کاتالونیا کے نیشنل ڈے کی تقریبات میں شرکت         قونصل جنرل بارسلونا عمران علی چوہدری کی کاتالونیا کے صدر کوائم تورا سے ملاقات         قونصل جنرل بارسلونا عمران علی چوہدری کی صوبائی فارن منسٹر الفریڈ بوش ای پاسکوال سے ملاقات         ظہیر جنجوعہ نے نئی سفارتی ذمہ داریاں سنبھال لیں         ذوالجناح کی تاریخ کیا ہے ؟         نوحہ کی تاریخ کیا ہے ؟         مقبوضہ کشمیر، ناکہ بندی مزید سخت، محرم کے جلوسوں پر بھارتی فوج کی فائرنگ، شیلنگ، کئی افراد زخمی         کھبی کھبی لوگ آپکی دل سے مدد کرنا چاہتے ہیں ، لیکن؟         سپین میں مقیم پاکستانی کمیونٹی کو دوہری شہریت کے قانون پاس ہونے کی خوشخبری جلد         قرطبہ ریسٹورنٹ کے ڈائریکٹر ملک شریف کی دوست احباب کے ساتھ گروپ فوٹو        

سوئزر لینڈ ’مودی دہشت گرد‘ کے نعروں سے گونج اٹھا

سوئزر لینڈ کے شہر زیورخ کی فضائیں ’مودی دہشت گرد‘  اور ’ہم کیا مانگیں آزادی‘ کے نعروں سے گونج اٹھیں۔

کشمیری اور پاکستانی سمیت سِکھ کمیونٹی نے سوئزر لینڈ کے شہر زیورخ کے سینٹر میں بھارت کے خلاف ایک احتجاجی ریلی نکالی جو شہر کے اہم مقامات سے ہوتی ہوئی سینٹر میں اختتام پذیر ہوئی۔

ریلی کے شرکاء نے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے کا اقدام نامنظور کے نعرے لگاتے ہوئے اقوام متحدہ، عالمی برادری اور سوئزر لینڈ کی حکومت سے مطالبہ کیا کہ کشمیریوں کو ان کا جائز حق دیا جائے۔

دوران احتجاج مظاہرین نے مختلف بینرز اور پلے کارڈز بھی اٹھا رکھے تھے، جس پر کشمیر کی آزادی، اقوام متحدہ اور عالمی برادری سے صورتحال کا نوٹس لینے جیسے مطالبات درج تھے۔

مظاہرین کا کہنا تھا کہ نہ کشمیریوں نے کبھی بھارت سے اِلحاق کا فیصلہ قبول کیا ہے اور نہ ہی کبھی بھارتی آئین کو تسلیم کریں گے، بندوق کے زور پر کشمیر کو مزید یرغمال نہیں بنایا جا سکتا۔

اس موقع پر مقررین نے خطاب کرتے ہوئے بھارت کی جانب سے کشمیر کے بھارت میں انضمام کی کوشش کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کی توہین قرار دیا اور عالمی برادری سے نوٹس لینے کی اپیل کرتے ہوئے کشمیریوں کو ان کا حق خود ارادیت دلانے کا مطالبہ کیا۔